مفسدات روزہ

روزے کے مفسدات (روزے کو توڑنے والی چیزیں):دو طرح کے ہیںایک وہ ہے جن سے قضا واجب ہوتا ہے۔ دوسرے وہ ہیں جن سے قضا اور کفا رہ دونوںواجب ہو تے ہیں۔
(1)مفسدات روزہ جن سے قضا وا جب ہو تی ہے :

(1)بھول کر کھا ،پی لینے کے بعد یہ سمجھنا کہ روزہ ٹوٹ گیا پھر کھا ،پی لینا (2)کلی کرتے وقت یا غوطہ لگاتے وقت بے اختیار پانی حلق کے نیچے اترجانا(3)ناک میںناس چڑھاناٰیا کا ن یاناک میںتیل ڈالنا (4) سر یا پیٹ کے زقم میںلگائی ہوئی دوا پیٹ یا دماغ تک پہنچ جانا(5)قصد ا منہ بھر قئے کرنا یا بے اختیار منہ بھر آئی ہوئی قئے کو لو ٹا کر نگل جانا (6)رات سمجھ کر صبح صادق کے بعد سحری کرنا (7)کسی چیز کانگل جانا (8)احتلام ہو نے پر یہ سمجھ کر کہ روزہ ٹوٹ گیا پھر کھا ،پی لینا (9) کسی خوشبو (عود وغیرہ) کا دھواںسونگھناوغیرہ۔
(2)وہ مفسدات روزہ جن سے قضا اور کفارہ دونوںواجب ہو تے ہیں:

(1)قصد اکھا ،پی لینا یا جما ع کرنا(2)سرمہ یا تیل لگا نے یا مسواک کرنے سے یہ سمجھ کرکے اس سے روزہ ٹوٹ گیاپھر قصداکھا ،پی لینا یا یا جماع کرنا ۔